چینی صدر شی جن پھنگ کی جانب سےانار کے دانوں کی مانند جڑے رہنا قومی اتحاد کا ایک واضح استعارہ ہے۔

0

انہوں نے کئی مواقعوں پر قومی اتحاد کے لیے اس تشبیہ کا ذکر کیا ہے۔
شی جن پھنگ نےکمیونسٹ پارٹی آف چائنا کی اٹھارہویں کانگریس کے بعد کئی مرتبہ اقلیتی علاقوں کے دورے کیے
ہیں۔ رواں سال انہوں نے گیوئی جو، گوانگ سی، چھینگ ہائی اور تبت کے دورے کیے۔ ایک ماہ قبل شی جن پھنگ
نے دورہ تبت کے دوران کہا کہ ہماری چھپن قومیتیں، چینی قوم کا ایک معاشرہ ہیں۔انہوں نے کہا کہ قومی اتحاد کے
لیے بھر پور کوشش ، کمیونسٹ پارٹی آف چائنا کی پیروی ، چینی خصوصیات کی حامل سوشلسٹ راہ پر گامزن
رہنے کی صورت میں ہی ہم ہدف کے مطابق چینی قوم کی عظیم نشاتہ الثانیہ کی منزل حاصل کر سکیں گے۔”

SHARE

LEAVE A REPLY