ہمیں چین اور امریکہ کے پرامن بقائے باہمی کو امکان سے حقیقت تک لے جانا ہے، چینی سفیر

0

اٹھائیس جولائی کو امریکہ میں نو تعینات شدہ چینی سفیر چھین گانگ واشنگٹن پہنچے۔انہوں نے امریکی میڈیا سے خطاب  کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت دنیا ایک صدی میں نظر نہ آنے والی بڑی تبدیلیوں سے گزر رہی ہے۔ مختلف تاریخوں اور ثقافتوں ، مختلف سماجی نظاموں اور ترقی کے مختلف مراحل کے حامل دو بڑے ممالک  کی حیثیت سے ، چین اور امریکہ باہمی دریافت ، ادراک اور ایڈجسٹمنٹ کے ایک نئے دور میں داخل ہو رہے ہیں ،اور نئے عہد میں ایک دوسرے کے ساتھ چلنے کے طریقے ڈھونڈ رہے ہیں۔ چین امریکہ تعلقات ایک نئے نازک موڑ پر ہیں ، بہت سی مشکلات اور چیلنجوں کے ساتھ ساتھ بہت سارے مواقع اور امکانات بھی موجود ہیں۔ کہا جاتا ہے کہ دو نوں ملکوں کے عوام  کی فلاح و بہبود  دنیا کے مستقبل سے متعلق ہے۔ چین امریکہ تعلقات کی صحت مند اور مستحکم ترقی دونوں ممالک کے عوام اور عالمی برادری کی مشترکہ توقع ہے۔
چینی صدر شی جن پھنگ کا کہنا ہے کہ مشکلات پر قابو پانے کے لئے حل تلاش کرنا پڑتا ہے اگر  پہاڑ پر سے گزرنا ہےتو ایک سڑک بنانا پڑتی ہے اور پانی سے گزرنا ہے تو ایک پل بناناپڑتا ہے۔ امریکی صدر بائیڈن نے کہا ہے کہ سب کچھ ممکن ہے۔ دونوں صدور کی تقریروں کی روح کے مطابق ،میں امریکہ کے تمام شعبوں کے ساتھ رابطے اور تعاون کا پل تعمیر کروں گا ، چین امریکہ تعلقات کی بنیاد کو برقرار رکھوں گا ، چین اور امریکہ کے عوام کے مشترکہ مفادات کا تحفظ کروں گا اور چین اور امریکہ کے تعلقات کو ترقی کے صحیح راستے پر واپس لانے کے لیے مل کر کام کروں گا  تاکہ باہمی احترام ، مساوی سلوک ، استفادے پر مبنی تعاون اور پرامن بقائے باہمی کو امکان سے حقیقت تک لے جایا جا سکے۔

SHARE

LEAVE A REPLY