سرکاری اہل کار وں کو عوامی ضروریات زندگی کا خیال رکھنا چاہیے

0

دو سو پچیس سال قبل چین کے مشہور خطاط ، مصور اور مصنف زن بائی چھیاو نے  بانس کی اہمیت کو اجاگر کرتا مصوری کا ایک فن پارہ تخلیق کیا۔ اس تصویر کے ساتھ  ایک شعر بھی درج ہے ” ہر شاخ اور ہر پتی کا خیال رکھا جانا چاہیئے ” ۔  زن بائی چھیاو اُس وقت  ایک کاونٹی کے سربراہ تعینات ہوئے اور عہدہ سنبھالنے کے بعد اُن کے اولین ترجیحی امور میں آفات سے متاثرہ افراد کو اشیائے خوراک اور انہیں روزگار کی فراہمی شامل رہے۔ اسی پس منظر میں انہوں نے یہ تصویر بنائی اور شعر لکھا ۔ 
آج دو سو سال سے زائد کا عرصہ گزرنے کے بعد چین کی حکمران پارٹی چینی کمیونسٹ پارٹی بدستور عوام کی مرکزی حیثیت پر مبنی گورننس کے نظریے پر مضبوطی سے کاربند ہے۔ شی جن پھنگ بار ہا اس شعر کا حوالہ دیتے ہوئے تمام عہدے داروں پر زور دیتے ہیں کہ عوام سے جڑا ہر کام غیر معمولی ہے ، عوام کو درپیش مسائل کے حل اور اُن کی شکایات کے فوری ازالے کے لیےبھر پور کوشش کرنی چاہیئے ۔سال   2020میں عالمی سطح پر وبائی صورتحال کے باوجود چینی حکمران جماعت نے عوام کا بھرپور خیال رکھتے ہوئے عوامی مفادات کو اولین حیثیت دیتے ہوئے انسداد وبا اور سماجی معاشی بحالی میں نمایاں کامیابی حاصل کی ہے ۔

SHARE

LEAVE A REPLY