چینی وزیر خارجہ کی آسیان علاقائی فورم کے وزرائے خارجہ کے اجلاس میں شرکت

0


چین کے وزیر خارجہ وانگ ای نے سات تاریخ کو چوبیسویں آسیان علاقائی فورم کے وزرائے خارجہ کےاجلاس میں شرکت کی۔
وانگ ای نے کہا کہ اس وقت ایشیا پیسیفک علاقے میں پرامن ترقی کے رجحان کو برقرار  رکھا جارہا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ، مزید سنگین دہشت گردی، بین الاقوامی جرائم،قدرتی آفات اور دیگر غیر روایتی سیکورٹی خطرات درپیش ہیں۔ چین نے  تعاون اور مشترکہ مفادات کی بنیاد پر نئے بین الاقوامی تعلقات قائم کرنے کی اپیل کی۔ 
وانگ ای نے کہا کہ تین طریقوں سے سلامتی بات چیت اور تعاون کو فروغ دیا جانا چاہئیے۔ سب سے پہلے بات چیت کے ذریعے سکیورٹی پر عمل درآمد کیا جانا چاہئیے۔  مشاورت  اور تبادلوں کو فروغ دیا جائے اور باہمی سمجھ اور اعتماد میں اضافہ کیا جائے۔ دوسری بات  تعاون کے ذریعے سکیورٹی کو فروغ دیا جانا چاہئیے۔رواں سال کے آغاز میں چین نے پہلی مرتبہ چین کی ایشیا پیسیفک سیکورٹی تعاون کی پالیسی ” نامی وائٹ پیپر  جاری کیا تھا، جس سے خطے میں امن و استحکام کے تحفظ کے حوالے سے چین کے عزم کا اظہار کیا گیا۔ تیسری بات  کہ ادارہ جاتی نظام  کے ذریعے سکیورٹی قائم کی جانی چاہیے۔ آسیان کی مرکزی حیثیت کی بنیاد پر کثیر جہتی سیکورٹی کے نظاموں کے درمیان رابطے کو فروغ دیا جانا چاہئے۔

SHARE

LEAVE A REPLY