پاکستان چین کے صوبہ یوئنان کے دارالحکومت کھن منگ میں منقعد ہونے والے جنوب اور جنوب مشرقی ایشیائی ممالک کی مصنوعات کی نمائش اور سرمایہ کاری میلے میں چیئرمین ملک کے طور پر شریک ہو گا

0

جنوب اور جنوب مشرقی ایشیائی ممالک کی مصنوعات کی نمائش اور سرمایہ کاری میلے کا انعقاد رواں برس بارہ سےاٹھارہ جون تک چین کے صوبہ یوئنان کے دارالحکومت کھن منگ میں کیا جائے گا۔پاکستان اس اہم تقریب میں بطور مہمان خصوصی چیئرمین ملک کی حیثیت سے شرکت کرئے گا۔

اس تقریب کے دوران چین اور جنوب۔جنوب مشرقی ایشیائی ممالک کے درمیان تجارتی فورمز کا انعقاد ، معاشی تجارتی تعاون کے منصوبوں پر دستخطوں سمیت متعلقہ ممالک میں ٹیکنالوجی کی منتقلی سے متعلق کانفرنس کا انعقاد شامل ہے جبکہ سیاحت ، پیشہ ورانہ افراد کے تبادلوں ، چین اور متعلقہ ممالک کے تھنک ٹنکس کا فورمز  اور دیگر معاشی سر گرمیاں بھی اس سرمایہ کاری میلے کا حصہ ہوں گی۔

 اس اہم معاشی سر گرمی کی تشہیر اور آ گاہی کے حوالے سے بیس تاریخ کو بیجنگ میں ایک تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں پاکستان ،لاوس ،کمبوڈیا ، میانمار ، انڈو نیشیا ، برونائی ،ویتنام ،تھائی لینڈ ، سنگا پور ، ملائشیا ، نیپال ،بھارت ،بنگلہ دیش ،مالدیپ ،سر ی لنکا،گیانا اور  تاجکستان سے تعلق رکھنے والے مندوبین نےشرکت کی۔اس موقع پر شرکاء نے چین اور جنوب۔جنوب مشرقی ایشیائی ممالک کے درمیان تجارتی معاشی روابط کے فروغ کے لیے کھن منگ میں منقعد ہونے والے سرمایہ کاری میلے کو نہایت اہم قرار دیا۔شرکاء کا کہنا تھا کہ اس میلے کے انعقاد سے  چین اور دیگر متعلقہ ممالک میں  تخلیقی اقدامات اور ترقی کے حوالے سے تبادلہ خیال اور ایک دوسرے کے تجربات سے استفادے کے مواقع میسر آ ئیں گے۔ شرکاء نے چین کے دی بیلٹ اینڈ روڈ منصوبے کو عالمی معاشی ترقی کا وژن قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس معاشی تقریب کے انعقاد سے جہاں دی بیلٹ اینڈ روڈ پر واقع ممالک کے درمیان اقتصادی روابط فروغ پائیں گے وہاں اس منصوبے کی ترقی بھی ممکن ہو سکے گی۔

تقریب میں شریک پاکستانی مندوب محمد عامر خان نے کہا کہ پاکستان  سرمایہ کاری میلے میں بھر پور طریقے سے شرکت کرئے گا۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کے کاروباری ادارے اس سرمایہ کاری میلے میں شریک ہوں گے اور مختلف شعبوں میں باہمی تعاون کے متعدد  معاہدےطے پائیں گے۔ محمد عامر خان نے مزید کہا کہ چین پاک اقتصادی راہداری منصوبہ دی بیلٹ اینڈ روڈ وژن کا فلیگ شپ پروگرام ہے جو پاکستان کی سماجی معاشی ترقی کے لیے کلیدی اہمیت کا حامل ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ چین اور پاکستان کے باہمی تعلقات انتہائی گہرے ہیں اور سی پیک منصوبہ پورے خطے کی معاشی ترقی کے لیے مفید ثابت ہو گا۔اس موقع پر شرکاء کو چین کے صوبہ یوئنان کی تجارتی معاشی اہمیت کے حوالے سےایک دستاویزی پروگرام کے زریعے بریفنگ بھی دی گئ۔

SHARE

LEAVE A REPLY